کانگو: کانگو میں پُر اسرار بیماری کے باعث 12 افراد لقمہ اجل بن گئے۔ افریقی ملک کانگو میں ایک پرسرار بیماری سے خوف و ہراس پھیل گیا ہے۔ تشخیص نہ ہو پانے والی بیماری میں اب تک 12 افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔ طبی ماہرین ناگہانی آفت سے نمٹنے کے لیے سر جوڑ کر بیٹھ گئے ہیں۔پُراسرار بیماری میں مبتلا مریضوں کا طبی معائنہ کرنے والے معالجین کا کہنا ہے کہ اس بیماری کی علامات ایبولا وائرس سے ملتی جلتی ہیں لیکن خون کے ٹیسٹ کرانے پر مثبت نتیجہ نہیں آتا ہے اور نہ ایبولا وائرس کی ادویات سے بیمار کو افاقہ ہوتا ہے۔معالجین کا مزید کہنا تھا کہ کونگو میں 24 جولائی کو محکمہ صحت کی جانب سے ایبولا وائرس کی وبا پھیلنے کی وارننگ جاری کی گئی تھی۔ اس لیے ملتی جلتی علامات کے ساتھ آنے والے مریضوں کو ایبولا وائرس سے متاثرہ مرض سمجھ کر علاج کیا گیا لیکن کوئی بھی مریض جانبر نہ ہوسکا۔واضح رہے کہ اس بیماری کی وجوہات جاننے کی خاطر مزید ٹیسٹ کیے جا رہے ہیں تاہم اب تک طبی ماہرین مرض کی جڑ تک نہیں پہنچ پائے ہیں۔ عالمی ادارہ برائے صحت نے بھی اس سال ایک پراسرار وباء پھیلنے کا امکان ظاہر کیا تھا اور بیماریوں کی نئی فہرست میں ایک بے نام اور پُراسرار بیماری کو جگہ دی گئی تھی۔